مقبوضہ جموں و کشمیر

اترپردیش: آشرم سربراہ کی مسلمان خواتین کو کھلے عام عصمت دری کی دھمکیاں

لکھنو¿08 اپریل (کے ایم ایس) سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو گردش کر رہی ہے جس میں بھارتی ریاست اتر پردیش کے ضلع سیتا پور کے خیر آباد قصبے میں بجرنگ منی داس نامی ایک ہندو کو یہ چیختے ہوئے سنا جا سکتا ہے کہ وہ مسلم خواتین کو ان کے گھروں سے اغوا کر کے کھلے عام ان کی عصمت دری کرے گا۔
مونی داس نامی ہندو سیتا پور کے خیر آباد قصبے میں مہارشی شری لکشمن داس ا±داسین آشرم کا سربراہ ہے۔یہ ویڈیو 2 اپریل کو اتر پردیش کے سیتا پور علاقے میں ایک مسجد کے سامنے ہندو تہوار نوراتری کے موقع پر نکالے گئے جلوس کے دوران بنائی گئی تھی۔ سیتا پور پولیس نے ویڈیو کی تصدیق کرتے ہوئے جمعرات کو ٹویٹ کیا کہ نفرت انگیز تقریر کی تحقیقات جاری ہیں تاہم واقعے کے چھ روز بعد بھی داس کے خلاف کوئی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی۔جب وہ مسلمان خواتین کے خلاف ہرزہ سرائی کر رہا تھا پولیس بھی وہاں موجود تھی۔اسکی تقریر پر ہندوﺅں کو تالیاںبجاتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے ۔

متعلقہ مواد

Leave a Reply

Back to top button
%d