مقبوضہ کشمیر : گپکاراتحاد مل کر آئندہ انتخابات لڑے گا، فارو ق عبداللہ ، محبوبہ مفتی

سرینگر04جولائی(کے ایم ایس)
غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں پیپلز الائنس فار گپکار ڈیکلریشن میں شامل دو بڑی جماعتوں نیشنل کانفرنس اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی نے اعلان کیا ہے کہ گپکار اتحاد مقبوضہ علاقے میں منعقد ہونیو الے آئندہ انتخابات مل کر لڑے گا۔
کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق نیشنل کانفرنس کے صدر فاروق عبداللہ نے جو اتحاد کے سربراہ ہیں سرینگر میں میڈیا کو بتایا کہ وہ مل کر انتخابات میں حصہ لیں گے ۔ انہوںنے اتحاد میں شامل ایک جماعت کی علیحدگی کے بارے میں کہاکہ وہ پارٹی کبھی اتحاد کا حصہ ہی نہیں تھی۔ وہ اتحاد کو اندر سے توڑناچاہتی تھی ۔ اسی طرح کے خیالا ت کا اظہار پی ڈی پی کی صدر محبوبہ مفتی نے بھی چند دن قبل کیا تھا۔انہوں نے کہاکہ تھا کہ ہم مل کر الیکشن لڑنے کا ارادہ رکھتے ہیں کیونکہ یہ عوام کی مرضی ہے اورہمیں اپنے کھوئے ہوئے وقار کی بحالی کے لیے مل کر جدوجہد کرنی چاہیے۔ایک سوال کے جواب میں فاروق عبداللہ نے کہا کہ جب قابض حکام چاہیں مقبوضہ علاقے میں انتخابات کرائے جا سکتے ہیں۔جاری ہندوامرناتھ یاترا کے بارے میں ایک سوال پرفاروق عبداللہ نے کہا کہ اس غار کو دریافت کرنے والا پہلگام کا ایک مسلمان تھا۔
واضح رہے کہ گپکار اتحاد پانچ جماعتوں پر مشتمل، جو مودی حکومت کی طرف سے منسوخ کی گئی دفعہ 370جس کے تحت جموں و کشمیر کو خصوصی حیثیت حاصل تھی کی بحالی کیلئے اکتوبر2020میں قائم کیاگیا تھا ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: