مقبوضہ جموں و کشمیر

غاصب بھارت کو جموں وکشمیرمیں اپنا یوم جمہوریہ منانے کا کوئی حق حاصل نہیں ہے ، نعیم خان

سرینگر 24 جنوری (کے ایم ایس)

کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئر رہنماء نعیم احمد خان نے کشمیریوں پرزوردیا ہے کہ وہ جمعرات کو بھارت کے یوم جمہوریہ کو یوم سیاہ کے طور پر منائیں ۔ انہوں نے کہاکہ بھارت نے کشمیریوں کے تمام بنیادی حقوق سلب کرر کھے ہیں اور اسے مقبوضہ جموں وکشمیرمیں اپنا یوم جمہوریہ منانے کا کوئی حق حاصل نہیں ہے ۔

غیر قانونی طورپر نظربند حریت رہنماء نعیم احمد خان نے نئی دلی کی تہاڑ جیل سے جاری ایک پیغام میں جموں و کشمیر پر بھارت کے غیر قانونی اور جبری قبضے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ کئی دہائیوں سے بھارتی قابض افواج کشمیری عوام کے بنیادی سیاسی اور جمہوری حقوق کو پامال کررہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر کے عوام کو اپنے سیاسی مستقبل کا فیصلہ کرنے کا حق دینے کیلئے آزادانہ، منصفانہ اور غیر جانبدارانہ استصواب رائے کرانے کے اپنے وعدوں کے باوجود، بھارتی حکمرانوں نے کشمیری عوام کی حق پر مبنی جدوجہد آزادی کو دبانے کیلئے فوجی طاقت کا وحشیانہ استعمال کر رہی ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ عالمی برادری کی یہ ذمہ داری کہ وہ بھارت کے جموں وکشمیر پر غیر قانونی قبضے اور کشمیر یوں کے خلاف اسکی بدترین ریاستی دہشت گردی اور انسانی حقوق کی سنگین پامالیوں کا فوری نوٹس لے ۔کل جماعتی حریت کانفرنس کی طرف سے 26جنوری بروز جمعرات کوبھارت کے یوم جمہوریہ کو مکمل ہڑتال کی کال کی حمایت کرتے ہوئے نعیم احمد خان نے کشمیری عوام سے اپیل کی کہ وہ اس دن مکمل ہڑتال کریں تاکہ دنیا کو یہ پیغام دیا جا سکے کہ بھارت کا جموں وکشمیر پر قبضہ غیر قانونی ہے اور کشمیر ی اسے قبول نہیں کرتے ۔ہندواڑہ میں بھارتی فوج کے ہاتھوں معصوم شہریوں کے قتل کے سانحہ کو یاد کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ 25جنوری 1990کو ہندواڑہ قصبے میں بھارتی بارڈر سکیورٹی فورس کے اہلکاروں نے 21نہتے کشمیریوںکو شہید کردیاتھا ۔انہوںقاتل بھارتی فوجیوں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کے لیے اس واقعے کی آزادانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے افسوس کااظہار کیاکہ کشمیریوں کے قاتل فوجی آج بھی آزاد گھوم رہے ہیں ۔

متعلقہ مواد

Leave a Reply

Back to top button
%d