بھارت نے اظہار رائے کے حق سمیت کشمیریو ں کے تمام حقوق چھین لیے ہیں۔کل جماعتی حریت کانفرنس

downloadسرینگر 21 جولائی (کے ایم ایس) بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس نے کہا ہے کہ بھارت نے اظہار رائے کے حق سمیت کشمیریوں کے تمام حقوق چھین لیے ہیں۔
کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق کل جماعتی حریت کانفرنس کی قیادت نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہا کہ مودی کی زیرقیادت فسطائی بھارتی حکومت کشمیریوں کواپنی بات کہنے کی بھی اجازت نہیں دے رہی ہے اوراس نے علاقے میں میڈیا کا بھی گھیرہ تنگ کررکھا ہے اورصحافیوں کو بلا وجہ ہراساں کیا جاتا ہے۔کل جماعتی حریت کانفرنس نے کہا کہ راشٹریہ سوائم سیوک سنگھ، بارتیہ جنتا پارٹی، ویشوا ہندو پریشد اور شیو سینا جیسی ہندوتوا تنظیموں کا پوشیدہ ایجنڈا مسلم اکثریتی جموں و کشمیر میں ہندو فسطائیت کو ہوا دینا ہے۔
بیان میں نشاندہی کی گئی کہ مودی حکومت بھارت کی پالیسی کو ہندوتوا کے مطابق تشکیل دینے کے لیے فوج اور پولیس کا استعمال کر رہی ہے۔بیان میں عالمی برادری پر زور دیا گیا کہ وہ کشمیری مسلمانوں کو مودی حکومت کی ہندوتوا فسطائیت سے بچانے کے لیے آگے آئے۔
بیان میں بھارتی وزیر اعظم کو یاد دلایا گیا کہ بندوقیں اور گولیاں کبھی بھی لوگوں کی امنگوں کو دبا نہیں سکتیں لہذا کشمیریوں کے جذبہ آزادی کو بھی قتل، گرفتاریوں اور تشدد سے شکست نہیں دی جا سکتی۔کل جماعتی حریت کانفرنس کی قیادت نے کہا کہ کشمیری تمام مشکلات کے باوجود بھارتی قبضے کے خلاف اپنی جدوجہد جاری رکھنے کے لیے پرعزم ہیں اور وہ دن دور نہیں جب مقبوضہ جموںوکشمیر میں آزادی کا سورج طلوع ہوگا۔

Leave a Reply

%d bloggers like this: