مقبوضہ جموں و کشمیر

دفعہ 370کی منسوخی سے متعلق بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ افسوسناک لیکن غیر متوقع نہیں ہے، میر واعظ

mirwaiz umar farooq-2سرینگر:
غیر قانونی طورپر بھارت کے زیر قبضہ جموں وکشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئر رہنما میر واعظ عمر فاروق نے کہا ہے کہ دفعہ 370کی منسوخی سے متعلق پر بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ افسوسناک ہے لیکن غیر متوقع نہیں۔
میرواعظ عمر فاروق کی طر ف سے سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر جاری ایک پیغام میں کہاگیا ہے کہ دفعہ370کی منسوخی کے مودی حکومت کے غیر قانونی اقدامات کو برقراررکھنے کا بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ افسوسناک ہے لیکن غیر متوقع نہیں ۔انہوں نے کہاکہ انہوں لوگوں کو جنہوں نے برصغیر کی تقسیم کے وقت جموں و کشمیر کے الحاق میں سہولت فراہم کی اوربھارتی قیادت کی طرف سے کئے گئے وعدوں اور یقین دہانیوں پر اعتماد کا اظہار کیاتھا خود کے ساتھ دھوکہ دہی کا احساس ہونا چاہیے۔”باقی ریاست جیسا کہ یہ اگست 1947 میں موجود تھی، جنگ بندی لائن پر منقسم ہے اوریہ ایک سلگتا ہوا انسانی اور سیاسی مسئلہ ہے۔”
خیال رہے کہ بھارتی سپریم کورٹ نے پیر کو مودی کی فسطائی بھارتی حکومت کی طرف سے 5اگست2019کو جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت کومنسوخ کرنے کے بھارت کے غیر قانونی، غیر جمہوری اور غیر آئینی اقدام کی توثیق کی ہے ۔

متعلقہ مواد

Leave a Reply

Back to top button
%d